Latest Posts

روسی طیارہ شام میں گر کرتباہ، 32 افراد ہلاک

Russia’s Defense Ministry said 32 people were killed when a military transport plane crashed as it prepared to land at an air base in Syria, state media reported.

The An-26 aircraft wasn’t shot down and the likely cause of Tuesday’s crash at Russia’s Khmeimim base in Syria was a malfunction, the ministry said, according to the Tass and RIA Novosti news services. Six crew and 26 passengers died, they reported.

It’s Russia’s largest single official loss of life in the Middle Eastern country since President Vladimir Putin ordered the start of an air campaign in support of Syrian leader Bashar al-Assad in September 2015. U.S. forces last month may have killed more than 200 Russian mercenaries who attacked a base held by mainly Kurdish troops, though Russia has denied any official involvement in that clash. (Read Full News in English - Bloomberg )
ماسکو: روس کا ایک طیارہ شام میں گر کرتباہ ہونے کے نتیجے میں 32 افراد ہلاک ہوگئے۔

بین الاقوامی میڈیا رپورٹس کے مطابق روسی طیارہ شامی شہر لاتکیا کے قریب ہمیم ایئربیس پر لینڈنگ کرتے ہوئے گر کرتباہ ہوگیا۔ طیارے میں 26 مسافر اور عملے کے 6 ارکان سوار تھے جو موقع پر ہی ہلاک ہوگئے۔

روسی وزارت داخلہ نے طیارہ تباہ ہونے کی تصدیق کرتے ہوئے ابتدائی طور پر اسے حادثہ قرار دیا ہے۔ وزارت داخلہ کا کہنا ہے کہ ابتدائی اطلاعات کے مطابق حادثے کی وجوہ تکنیکی خرابی ہے۔
یہ خبر بھی پڑھیں: شام میں باغیوں کا حملہ، 7 روسی طیارے اور اسلحہ ڈپو تباہ

ایئر بیس پر امدادی کارروائیاں مکمل کرلی گئی ہیں جب کہ حادثے کی تحقیقات کا آغاز کردیا گیا ہے۔ روسی وزارت داخلہ کا کہنا ہے کہ طیارہ رن وے سے 500 میٹر کی دوری پر گر کرتباہ ہوا حادثے کے محرکات جاننے کے لیے خصوصی کمیشن تشکیل دے دیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ کچھ عرصے قبل باغی جنگجوؤں نے ہمیم ہوائی اڈے پر مارٹر حملہ کیا تھا جس میں روسی طیاروں کو نقصان پہنچا تھا، اس حملے کے ایک ہفتے بعد 7جنوری کو روسی فضائیہ نے ایئربیس پر ڈرون حملہ ناکام بنانے کا دعویٰ کیا تھا

HD Photos Designed by Templateism.com Copyright © 2014

Theme images by Bim. Powered by Blogger.